29

’کھلاڑیوں کو سہولیات دینا تو دور ہمارا روزگار تک چھین لیا‘ – ایکسپریس اردو

حکومت نے اپنی ترجیحات میں سپورٹس کو شامل نہ کیا کہ تو جو میڈلز مل رہے ہیں۔وہ بھی آنا بند ہوجائیں گے، ریسلر۔

برمنگھم: کامن ویلیتھ گیمز میں سلور میڈل جیتنے والے انعام بٹ کہتے ہیں کہ کھلاڑیوں کو سہولیات دینا تو دور کی بات ہے ہمارا روزگار تک چھین لیا گیا ہے۔

برمنگھم میں گولڈ میڈل فائٹ ہارنے کے بعد ایکسپریس نیوز سے بات کرتے ہوئے انعام بٹ کا کہنا تھا کہ ساری دنیا کھیلوں پر انوائسمنٹ کرکے ہم سے بہت آگے نکل گئی ہے، ہم نیچے جارہے ہیں، بھارتی اتھلیٹس کیلئے جتنا بجٹ رکھا جاتا ہے پاکستان میں تصور بھی نہیں کیا جاسکتا۔

انہوں نے کہا کہ گولڈ میڈل پانے کے لیے جدید سہولیات کا ہونا اہم ہے، بیرون ملک ٹریننگ کا مطالبہ ہر بار کرتا ہوں مگر اس بار بھی پورا نہیں کیا جاتا۔

مزید پڑھیں: کامن ویلتھ گیمز؛ پاکستانی ریسلرز انعام بٹ چاندی اور عنایت اللہ کانسی کا تمغہ لینے میں کامیاب

انعام بٹ نے کہا کہ پاکستان اولمپک ایسوسی ایشن، پاکستان ریسلنگ فیڈریشن، پاکستان اسپورٹس بورڈ سب نے تعاون کیا ہے تاہم ہمیں دوسرے ممالک کی طرح اپنے کھلاڑیوں کو سپورٹ کرنا ہوگا۔

مزید پڑھیں: کامن ویلتھ گیمز، پاکستانی کھلاڑی 200 میٹر ریس کے سیمی فائنل میں پہنچ گئے

قومی ریسلر کا کہنا تھا کہ حکومت کھلاڑیوں کی ملازمتیں بحال کرنے کے ساتھ کھلاڑیوں کے لیے زیادہ بجٹ مختص کرے تو ہم بھی بہت آگے جاسکتے ہیں۔




اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں