239

بارسلونا میں تعینات پاکستانی قونصل جنرل کو ماتحت خاتون اہلکار کو ہراساں کرنے پر ملازمت سے برطرف کر دیا گیا



بارسلونا میں تعینات پاکستانی قونصل جنرل کو ماتحت خاتون اہلکار کو ہراساں …

بارسلونا(ارشد نذیر ساحل )حکومت پاکستان نے سپین میں تعینات قونصل جنرل مرزا سلمان بابر بیگ کو ماتحت خاتون اہلکار کو جنسی طور پر ہراساں کرنے کا الزام ثابت ہونے پر عہدے سے ہٹا دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق متاثرہ لڑکی نے چند ہفتے قبل قونصل جنرل کے خلاف جنسی ہراسیت کے الزامات عائد کیے تھے ، جس کے بعد سپین میں پاکستانی سفیر شجاعت راٹھور نے واقعے کی تفصیلات طلب کیں، مقامی سطح پر انکوائری مکمل کرنے کے بعد معاملہ پاکستانی وزارت خارجہ کو بھجوایا گیا جس کے بعد وزارت خارجہ ہیڈکوارٹرز سے 2 رکنی انکوائری ٹیم نے سپین کا دورہ کیا، اس دوران فریقین اور عملے کے بیانات قلمبند اور ثبوت اکٹھے کیے گئے۔

انکوائری ٹیم کی تحقیقات کی روشنی میں وزارت خارجہ نے مرزا سلمان بابر بیگ کو قونصل جنرل کے عہدے سے برطرف کرتے ہوئے ہیڈ کوارٹرز رپورٹ کرنے کی ہدایت کی ہے۔ واضح رہے کہ متاثرہ لڑکی نے سپین کے نظام انصاف میں بھی واقعہ کی رپورٹ کرائی تھی،میڈرڈ میں پاکستانی سفیر شجاعت راٹھور  نے سفارت کار کے خلاف خاتون کو ہراساں کرنے کے الزامات کو انتہائی سنجیدگی سے لیا اور فوری انکوائری کر کے قونصل جنرل کو ہیڈکوارٹرز رپورٹ کرنے کی ہدایت کر دی گئی ہے۔ 

دوسری جانب مرزاسلمان بابر بیگ نے صافیوں سےگفتگو میں کہا کہ مجھ پر لگنے والے الزامات میں کوئی حقیقت نہیں ،میں اپنے اوپر لگنے والے بے بنیاد الزامات کے خلاف عدالت کا دروازہ کھٹکھٹاوں گا،انہوں نے مزید کہا کہ مجھ پہ الزامات لگانے والی خاتون کو بہت سےلوگوں کی شکایات اور کمیونٹی کے ساتھ بدتمیزی  کی وجہ سے جاب سے فارغ کیا گیا ہے جس پر اس نے مجھ پہ الزمات لگائے ہیں ۔

مزید :

بین الاقوامی –




اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں