37

امریکہ نے روسی صدر کی مبینہ گرل فرینڈکو بلیک لسٹ کردیا



امریکہ نے روسی صدر کی مبینہ گرل فرینڈکو بلیک لسٹ کردیا

واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) یوکرین پر حملے کے بعد امریکہ و دیگر مغربی ممالک کی طرف سے روس اور کئی روسی شخصیات پر پابندیاں عائد کی جا چکی ہیں۔ اب امریکہ کی طرف سے روسی صدر ولادی میر پیوٹن کی مبینہ گرل فرینڈ سمیت مزید کئی شخصیات کو بلیک لسٹ کر دیا گیا ہے۔نجی ٹی وی چینل 24نیوز کے مطابق پابندیوں کی زد میں آنے والی یہ شخصیات صدر پیوٹن کی قریبی خیال کی جاتی ہیں۔ ان میں ارب پتی روسی شہری آندرے گریگوریوچ گیوریف بھی شامل ہے جو برطانوی دارالحکومت لندن میں دوسری سب سے بڑی جائیداد کا مالک ہے۔ 

آندرے برطانیہ کی وائٹن ہرسٹ اسٹیٹ کا مالک ہے جو بکنگھم پیلیس کے بعد لندن کی دوسری بڑی اسٹیٹ ہے۔ آندرے ’PhosAgro‘ کا بانی اور سابق ڈپٹی چیئرمین ہے۔ ان کی کمپنی عالمی فرٹیلائزر مارکیٹس کی ایک بڑی سپلائر ہے۔ صدر پیوٹن کی مبینہ گرل فرینڈ کا نام الینا کیبائیوا ہے جو سابق اولمپک جمناسٹ ہے اور کئی سالوں سے مبینہ طور پر صدر پیوٹن کے ساتھ تعلق میں ہے۔ اس کے علاوہ روسی حکومت کے ویلتھ فنڈ کے منیجر کیریل دمتریف کی اہلیہ نتالیا پوپووا اور دیگر کئی شخصیات پر بھی پابندیاں عائد کی گئی ہیں۔ امریکی محکمہ خزانہ کی طرف سے بتایا گیا ہے کہ نتالیا پوپوا ’انوپریکتیکا‘نامی ٹیکنالوجی فرم کے لیے کام کرتی ہیں۔ اس فرم کو مبینہ طور پر صدر پیوٹن کی ایک بیٹی چلاتی ہے۔

ان پابندیوں کا اعلان کرتے ہوئے امریکی محکمہ خزانہ کی سیکرٹری جینٹ ہیلن کی طرف سے کہا گیا ہے کہ ”بے گناہ لوگ یوکرین کے خلاف روسی جارحیت کا نشانہ بن رہے ہیں۔ صدر پیوٹن کے قریبی لوگ مالا مال ہو گئے ہیں اور ایک پرتعیش زندگی گزار رہے ہیں۔ محکمہ خزانہ روسی اشرافیہ اور صدر پیوٹن کے قریبی لوگوں کو یوکرین پر مسلط کی گئی غیرقانونی جنگ میں شرکت پر جوابدہ ٹھہرانے کے لیے ہر ممکن کوشش کرے گا۔“

مزید :

بین الاقوامی –




اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں