38

نیب 50 کروڑ روپے سے کم کے کرپشن کیسز کی تحقیقات نہیں کر سکےگا  قومی اسمبلی میں نیب دوسرا ترمیمی بل منظور



نیب 50 کروڑ روپے سے کم کے کرپشن کیسز کی تحقیقات نہیں کر سکےگا،  قومی اسمبلی …

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)  قومی اسمبلی میں نیب دوسرا ترمیمی بل کثرت رائے سے منظور کرلیا گیا  جس کے مطابق نیب  50 کروڑ روپے سے کم کے کرپشن کیسز کی تحقیقات نہیں کر سکے گا۔

نجی ٹی وی “دنیا نیوز” کے مطابق نیب دوسرا ترمیمی بل 2022 وفاقی وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ کی جانب سے قومی اسمبلی میں پیش کیا گیا،  بل کے مطابق احتساب عدالت کے ججز کی تقرری سے متعلق صدر کا اختیار بھی واپس لے لیا گیا،   ملزمان کے خلاف تحقیقات کیلئے دیگر کسی سرکاری ایجنسی سے مدد نہیں لی جا سکے گی۔

بل کے مطابق ملزم کا ٹرائل صرف اس کورٹ میں ہوگا ،  نیب تحقیقات مکمل ہونے کے بعد ریفرنس دائر کرے گا جبکہ  پلی بارگین کے تحت رقم واپسی میں ناکامی کی صورت میں پلی بارگین کا معاہدہ ختم ہو جائے گا ،  بل کے تحت نیب آرڈیننس کا اطلاق حکومت کی ایمنسٹی سکیم کے تحت  لین دین، ریاستی ملکیت کے اداروں کے بورڈ آف ڈائریکٹرز پر نہیں ہو گا،   صدر وفاقی حکومت کی سفارش پر پراسیکیوٹر جنرل مقرر کرے گا۔

مزید :

اہم خبریں -قومی –




اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں