37

چوروں نے چھینی گئی گھڑی جعلی ہونے پر واپس کردی – ایکسپریس اردو

اٹلی میں سوئزرلینڈ کے سیاح سے چھینی گئی گھڑی جعلی ہونے پر اسے واپس کردی گئی ہے جس پر رچرڈ میلی برانڈ کا گمان تھا ۔ فوٹو: فائل

نیپلز: اگرچہ اٹلی جانے والے سیاح وہاں کی مہمان نوازی کے گن گاتے ہیں لیکن سوئزرلینڈ کے ایک سیاح کو عجیب واقعہ پیش آیا جس میں پہلے ڈاکوؤں نے ان کی گھڑی اتروائی اور کچھ دیر بعد جعلی ہونے پر اسے واپس کردیا۔

اٹلی کے شہر نیپلز میں پیازا ٹرائسٹے ای ٹرینٹو کے معروف علاقے میں اتوار کی رات سی سی ٹی وی فوٹیج میں ایک اہم واقعہ ریکارڈ ہوا جس میں سوئزرلینڈ کے ایک سیاح سے گن پوائنٹ پران کی گھڑی چھینی گئی۔ اس کے سات منٹ بعد ایک اور شخص کیفے میں داخل ہوا اور معذرت کرتے ہوئے گھڑی اس کے مالک کو واپس کردی۔

تفصیلات کے مطابق ٹی شرٹ اور شارٹس میں ملبوس ایک شخص نے سیاح پر پستول تانی اور کلائی پر پہنی گھڑی تیزی سے اتارکر رفوچکر ہوگیا۔ اس کی وجہ یہ سامنے آئی کہ یہ انتہائی قیمتی برانڈ ’رچرڈ ملی‘ کی نقل تھی جس پر اصل کا گمان تھا اور یہی وجہ ہے کہ پہلے ڈاکو نے اسے چھینا اور بعد میں واپس کردیا۔

گھڑی لوٹانے والے شخص نے دو مرتبہ سیاح کو سوری کہا جس کا مقصد یہ ہوسکتا ہے کہ وہ پولیس میں رپورٹ نہ کرے۔ تاہم اصل گھڑی کی قیمت تین لاکھ یورو بتائی جارہی ہے۔ انتظامیہ کےمطابق یہ علاقہ کچھ عرصے سےمجرمانہ سرگرمیوں کا مرکز بنا ہوا ہے جبکہ پولیس ان کی سرکوبی میں مصروف ہے۔

نیپلس میں منتظمین کی جانب سے کہا گیا ہے کہ جرائم پیشہ گروہ رات کے وقت زیادہ سرگرم ہوتے ہیں اس لیے سیاحوں کو احتیاطی تدابیر کا حکم دیا گیا ہے۔ یہاں تک کہ 13 اور 14 برس کے بچے بھی پستول تھامے واردات کررہے ہیں۔ اس سےپیازا کی اطراف کا علاقہ شدید متاثر ہوا ہے۔




اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں