مشیر خرانہ شوکت ترین کے کاغذات نامزدگی چیلنج کردئیے گئے 40

مشیر خرانہ شوکت ترین کے کاغذات نامزدگی چیلنج کردئیے گئے

مشیر خرانہ شوکت ترین کے کاغذات نامزدگی چیلنج کردئیے گئے

پشاور(ڈیلی پاکستان آن لائن)خیبرپختونخوا سے سینیٹ کے خالی نشست پر انتخابات کے لیے مشیر خزانہ شوکت ترین کے کاغذات نامزدگی الیکشن ٹربیونل میں چیلنج کردیے گئے ہیں۔

 کاغذات نامزدگی اے این پی کے امیدوار امیر زادہ کی جانب سے چیلنج کیے گئے۔ امیر زادہ نے ریٹرنگ افسر کے فیصلے کو چیلنج کرتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ شوکت ترین مردان کے  رہائشی نہیں ہیں اور نہ ہی الیکٹورل رول میں رجسٹرڈ ہیں کاغذات نامزدگی کے ساتھ جو الیکٹورل رول جمع ہے وہ بھی سرٹیفائیڈ نہیں ہے۔درخواست میں استدعا کی گئی کہ شوکت ترین مردان کے ووٹر ہی نہیں تو کیسے اس حلقے سے سینیٹ کی سیٹ پر الیکشن لڑسکتے ہیں؟ اس لیے شوکت ترین کے کاغذات نامزدگی منظور کرنے کے ریٹرنگ افسر کے فیصلے کو کالعدم قرار دیا جائے۔

واضح رہے کہ تحریک انصاف کی حکومت نے اپنے سینیٹر سے استعفی لیکر شوکت ترین کو سینیٹر بنوانے کا فیصلہ کیا تھا۔

مزید :

قومی –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں