سپین میں کئی ہفتے قبل پھٹنے والے آتش فشاں کے لاوے کی تباہ کاریاں جاری مزید کئی آبادیاں لپیٹ میں آگئیں دل دہلا دینے والے مناظر 27

سپین میں کئی ہفتے قبل پھٹنے والے آتش فشاں کے لاوے کی تباہ کاریاں جاری مزید کئی آبادیاں لپیٹ میں آگئیں دل دہلا دینے والے مناظر

سپین میں کئی ہفتے قبل پھٹنے والے آتش فشاں کے لاوے کی تباہ کاریاں جاری ، مزید …

میڈرڈ(مانیٹرنگ ڈیسک) سپین کے جزیرے لاپالما پرکئی ہفتے قبل پھٹنے والے آتش فشاں سے نکلنے والے لاوے کی تباہ کاریاں جاری ہیں اور مزید کئی آبادیاں لاوے کی نذر ہو گئی ہیں۔ دی سن کے مطابق اس آتش فشاں کا نام ’کمبرے ویخا‘ ہے جس سے نکلنے والا لاوا 700میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے بہہ رہا ہے اور اس لاوے کا درجہ حرارت 1ہزار 240ڈگری سینٹی گریڈ تک ہے۔ 

لاوے کی تباہ کاریوں کے سبب جزیرے کے مزید علاقے بھی خالی کرا لیے گئے ہیں اور پروازیں منسوخ کر دی گئی ہیں۔ اس کے علاوہ ساحل سمندر پر پیراکی پر بھی پابندی عائد کر دی گئی ہے۔ ہسپانوی ایئرپورٹ آپریٹر AENAکی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ ”آتش فشاں سے نکلتے لاوے اور راکھ کے سبب لاپالما ایئرپورٹ بند ہے اور طے شدہ پروٹوکول پر عمل کیا جا رہا ہے۔ ہماری لوگوں کا تحفظ ہماری اولین ترجیح ہے۔“ 

واضح رہے کہ آتش فشاں پھٹنے کی وجہ سے لاپالما ایئرپورٹ کو یہ دوسری بار بند کیا گیا ہے۔ 25ستمبر کو ایئرپورٹ پہلی بار بند کیا گیا تھا۔ لاوے کی زد میںاب تک 1ہزار سے زائد عمارتیں متاثر ہو چکی ہیں اور ان میں سے اب تک 880عمارتیں مکمل طور پر تباہ ہو چکی ہیں، جبکہ دھماکوں، راکھ اور لاوے کی وجہ سے 6ہزار سے زائد لوگ بے گھر ہو چکے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں