سٹیٹ بینک ترمیمی بل منظور کرانے کیلئے حکومتی سینیٹر ڈاکٹر زرقہ آکسیجن لگائے ایوان میں آئیں  45

سٹیٹ بینک ترمیمی بل منظور کرانے کیلئے حکومتی سینیٹر ڈاکٹر زرقہ آکسیجن لگائے ایوان میں آئیں 

سٹیٹ بینک ترمیمی بل منظور کرانے کیلئے حکومتی سینیٹر ڈاکٹر زرقہ آکسیجن لگائے …

اسلام آباد ( ڈیلی پاکستان آن لائن ) حکومت نے سینیٹ میں سٹیٹ بینک ترمیمی بل منظور کرانے کیلئے اپنی پوری طاقت استعمال کی ، یہاں تک کہ حکومتی سینیٹر ڈاکٹر زرقہ آکسیجن لگائے ایوان میں آئیں اور آپنا ووٹ ڈالا ۔

چیئرمین سینیٹ سردار صادق سنجرانی کی زیر صدارت سینیٹ کا اجلاس ہوا  جس میں سٹیٹ بینک ترمیمی بل منظوری کیلئے پیش کیا گیا ، اپوزیشن لیڈر اور پاکستان پیپلزپارٹی کے سید یوسف رضا گیلانی ، مسلم لیگ ن کے مشاہد حسین سید ، سینیٹر نزہت صادق  ایوان سے غیر حاضر رہے جبکہ اے این پی کے عمر فاروق کانسی ووٹنگ کے وقت ایوان سے نکل گئے جس کا فائدہ حکومت کو ہوا ۔

ادھر حکومت نے بل منظور کرانے کیلئے پوری طاقت لگا دی ، حتیٰ کہ حکومتی سینیٹر  ڈاکٹر زرقہ  آکسیجن لگائے ایوان میں پہنچیں ، جہاں ڈپٹی سینیٹر اور دیگر نے ان کی خیریت دریافت کی ۔ 

ڈاکٹر زرقہ نے طبیعت کی ناسازی کے باوجود بل کے حق میں ووٹ دے کر بل کامیاب کرانے میں اہم کردار ادا کیا۔دوسری جانب اپوزیشن کے سینیٹر دلاور خان نے اپنا ووٹ حکومتی حق میں ڈال کر اپوزیشن کو شکست دے دی ۔ 

واضح رہے کہ سٹیٹ بینک ترمیمی بل کے حق میں  43 اور مخالفت میں  42 ووٹ ڈالے گئے 

مزید :

اہم خبریں -قومی –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں